لو لیٹرز

پیارے بھائی جان!

          آپ کی خیریت ہر وقت نیک مطلوب ہے۔

          آپ سے گزارش ہے کہ آپ میری اولاد کو پیسے بھیجنا بند کر دیں تاکہ وہ خود عزت سے کمانا سیکھیں۔ آپ کے سارے پیسے امیر کھا جاتا ہے اور اپنے چھوٹے بھائی غریب کو کچھ نہیں دیتا۔ امیر کو سمجھائوں تو وہ اکڑنے لگتا ہے کہ وہ آپ کا لاڈلا ہے اور وہ جیسے چاہے اُس پیسے کو استعمال کرے۔ غریب اس پر کڑھتا رہتا ہے خاص طور پر تب جب امیر اُس کو پیسے کا حساب کتاب رکھنے کے لیے کہتا ہے۔

          آپ ہر سال غریب کی حرکتیں دیکھ دیکھ کر امیر کے پیسے بھی بند کرنے کی دھمکیاں دیتے ہیں۔ امیر اُس بات پر غریب سے اور بھی زیادہ نفرت کرنے لگا ہے۔

          میں جانتا ہوں کہ یہ آپ کی محبت ہے کہ آپ صرف دھمکیاں دیتے ہیں پیسے بند نہیں کرتے لیکن آپ کی اس محبت نے میری اولاد کو تباہ کر دیا ہے۔ برائے مہربانی یہ پیسے بند کر دیں تاکہ امیر کی عیاشیاں ختم ہوں اور وہ غریب کے ساتھ مل کر عزت اور محنت کی روزی کمانا سیکھ لے۔

          آخر میں ایک شکوہ ـــــ آپ ایبٹ آباد آئے اور ملے بغیر چلے گئے۔ اگلی بار آئے تو جانے نہیں دوں گا آپ کو ، کچھ دن کے لیے ہی سہی پر مہمان بنا کر رکھوں گا آپ کو۔

                                                                             آپ کی سلامتی کے لیے 24 گھنٹے دُعا گو

                                                                             آپ کا اکلوتا اور سوتیلا چھوٹا بھائی

                                                                                      پاکستان